Wednesday , January 20 2021
Home / Fashion / Latest Charizma Naranji Embroidered Printed Shirt With Net Chiffon Dupatta Collection Vol 02

Latest Charizma Naranji Embroidered Printed Shirt With Net Chiffon Dupatta Collection Vol 02



Latest Charizma Naranji Embroidered Printed Shirt With Net Chiffon Dupatta Collection Vol 02

The NARANJI COLLECTION VOL 2 is dedicated to the finer things in life; it is the accessible apparel luxury option for modern woman. Our collection not only educates and informs our diverse audiences about the latest fashion, trends and fads but also reflects on the thriving styles and vogue culture scenes that one can easily bring into their own lives. From the modern cuts to the simple but innovative silhouette, the women are given the liberty to modify their dresses according to the trends that define them and their lifestyle. These women can get inspiration from our impressive look-book of the season and use it as a tool to come closer to refined individual vogue that is the need of the time.
Thanks a lot for watching And please Don’t forget to Like Subscribe My channel for more Videos(FASHION TRENDS)
Pintrest;
https://www.pinterest.com/mahreenkiran/
Linkedin;
https://www.linkedin.com/m/login/
Twitter;

Youtube;
https://www.youtube.com/channel/UCtcZo8a0ES050ked8-WIQiA
Blogger;
https://mahreenkiran.blogspot.com/?zx…
Facebook;
https://www.facebook.com/fashion.trende/
Googleplus;
https://plus.google.com/u/0/

source

About approid

Check Also

Top Trendy Designer Dress Designs || Stylish Kurta Designs For Ladies || New Dress Designs

Top Trendy Designer Dress Designs || Stylish Kurta Designs For Ladies || New Dress Designs …

3 comments

  1. محترم السلامُ علیکم و رحمتہُ اللہ وبرکاتہُ

    آپ سے گزارش ہے کہ نا محرم اور بے پردہ عورتوں پر مشتمل ویڈیو ارسال نہ کریں۔ خوامخوہ اپنے اور دوسروں کے اعمال کو ضائع نہ کریں۔اور نہ ہی شیطان کے کارندے بنیں۔ یہ ایک شیطانی کام ہے۔ اس طرح کا پیغام بھیجنے سے پہلے مندرجہ ذیل آیات کا مطالعہ ضرور کر لیا کریں۔ یاد رکھیں اس طرح کے پیغام کو پھیلانا گناہ ہے۔ اللہ تعالی ہمیں دین کی سمجھ عطا فرمائے آمین۔

    سورۃ النور 24:21

    يٰٓاَيُّهَا الَّذِيْنَ اٰمَنُوْا لَا تَتَّبِعُوْا خُطُوٰتِ الشَّيْطٰنِ ۭ وَمَنْ يَّتَّبِعْ خُطُوٰتِ الشَّيْطٰنِ فَاِنَّهٗ يَاْمُرُ بِالْفَحْشَاۗءِ وَالْمُنْكَرِ اے ایمان والو! شیطان کے نقش قدم پر نہ چلو ۔ اور جو شخص شیطان کے قدموں پر چلے گا تو وہ تو بے حیائی اور برے کاموں کا ہی حکم دے گا۔

    سورۃ البقرۃ 2:268

    اَلشَّيْطٰنُ يَعِدُكُمُ الْفَقْرَ وَيَاْمُرُكُمْ بِالْفَحْشَاۗءِ ۚ

    شیطان تمہیں (ا اللہ کی راہ میں خرچ کرنے سے روکنے کے لئے) تنگدستی کا خوف دلاتا ہے اور بےحیائی کا حکم دیتا ہے

    سورۃ الا عراف 7:33

    قُلْ اِنَّمَا حَرَّمَ رَبِّيَ الْفَوَاحِشَ مَا ظَهَرَ مِنْهَا وَمَا بَطَنَ وَالْاِثْمَ

    کہہ دیجئے میرے رب نے حرام کیا ہےبےحیائی کی باتوں کو جو ان میں کھلی ہوئی ہیں اور جو چھپی ہوئی ہیں اور گناہ کو

    سورۃ النور 24:19

    اِنَّ الَّذِيْنَ يُحِبُّوْنَ اَنْ تَشِيْعَ الْفَاحِشَةُ فِي الَّذِيْنَ اٰمَنُوْا لَهُمْ عَذَابٌ اَلِيْمٌ ۙ فِي الدُّنْيَا وَالْاٰخِرَةِ ۭ وَاللّٰهُ يَعْلَمُ وَاَنْتُمْ لَا تَعْلَمُوْنَ

    بیشک جو لوگ اس بات کو پسند کرتے ہیں کہ مسلمانوں میں بےحیائی پھیلے ان کے لئے دنیا اور آخرت میں دردناک عذاب ہے، اور اللہ (ایسے لوگوں کے عزائم کو) جانتا ہے اور تم نہیں جانتے

    تفسیر تیسرالقرآن مولانا عبدالرحمن کیلانی رحمتہ اللہ علیہ)

    آج کل فحاشی کی اشاعت کی اور بھی بہت سی صورتیں ایجاد ہوچکی ہیں ۔ مثلاً ٹھیٹر، سینماگھر، کلب ہاؤس، اور ہوٹلوں کے پرائیوٹ کمرے۔ ریڈیو اور ٹی وی پر شہوت انگیز پروگرام اور زہد شکن گانے۔ فحاشی پھیلانے والا لٹریچر، ناول افسانے اور ڈرانے وعیرہ اور جنسی ادب۔ اخبارات اور اشتہارات وغیرہ میں عورتوں کی عریاں تصاویر۔ ناچ گانے کی محفلیں ۔ غرض فحاشی کی اشاعت کا دائرہ آج کل بہت وسیع ہوچکا ہے اور اس موجودہ دور میں فحاشی کے اس سیلاب کی ذمہ دار یا تو خود حکومت ہے یا پھر سرمایہ دار لوگ جو سینما،ٹھیٹر اور کلب گھر وغیرہ بناتے ہیں یا اپنا میک اپ کا سامان بیچنے کی خاطر انہوں نے عورتوں کی عریاں تصاویر شائع کرنے کا محبوب مشغلہ اپنا رکھا ہے یا بعض اداروں اور مکانوں میں عورتوں کو سیل مین کے طور پر ملازم رکھا جاتا ہے تاکہ مردوں کے لئے وہ باعث کشش ہوں اور ان کے کاروبار کو فروغ حاصل ہو ۔ ان سب باتوں کے لئے وہی وعید ہے جو اس آیت میں مذکور ہے۔ اور اسلامی حکومت کا فرض ہے کہ فحاشی کی ان تمام اقسام کو قابل دست اندازی پولیس جرم قرار دے۔ تاکہ کم ازکم دنیا کے عذاب سے تو لوگ بچ سکیں ۔ ورنہ انھیں دنیا میں عذاب چکھنا ہوگا اور آخرت کا عذاب تو بہرحال یقینی ہے۔

    3 : سورة آل عمران 135

    وَ الَّذِیۡنَ اِذَا فَعَلُوۡا فَاحِشَۃً اَوۡ ظَلَمُوۡۤا اَنۡفُسَہُمۡ ذَکَرُوا اللّٰہَ فَاسۡتَغۡفَرُوۡا لِذُنُوۡبِہِمۡ ۪ وَ مَنۡ یَّغۡفِرُ الذُّنُوۡبَ اِلَّا اللّٰہُ ۪۟ وَ لَمۡ یُصِرُّوۡا عَلٰی مَا فَعَلُوۡا وَ ہُمۡ یَعۡلَمُوۡنَ ﴿۱۳۵﴾

    اور یہ وہ لوگ ہیں کہ اگر کبھی کوئی بے حیا ئی کا کام کر بھی بیٹھتے ہیں یا (کسی اور طرح) اپنی جان پر ظلم کر گذرتے ہیں تو فورا اللہ کو یاد کرتے ہیں کہ اور اس کے نتیجے میں اپنے گناہوں کی معافی مانگتے ہیں، اور اللہ کے سوا ہے بھی کون جو گناہوں کی معافی دے؟ اور یہ اپنے کیے پر جانتے بوجھتے اصرار نہیں کرتے۔
    Remove music too

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *